اسرائیل اور عرب امارات کے درمیان آزاد تجارتی معاہدہ ہوگیا

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) متحدہ عرب امارات اور اسرائیل میں آزاد تجارت معاہدے پر دستخط ہوگئے جو دونوں ممالک کے تعلقات میں تاریخی پیشرفت ہے۔اسرائیل کے وزیر معیشت اور صنعت اورنا باربیوا اور ان کے اماراتی ہم منصب عبداللہ بن طوق المری نے کئی ماہ کے مذاکرات کے بعد اس معاہدے پر دستخط کیے۔

اسرائیل کا کسی بھی عرب ملک کے ساتھ یہ پہلا فری ٹریڈ معاہدہ ہے۔دونوں ممالک کے درمیان تجارتی حجم 2ارب ڈالر سے بڑھنے کا امکان ہے جب کہ معاہدےکے تحت 96 فیصد مصنوعات پرکسٹم ڈیوٹی ختم کی جائےگی۔

اس موقع پر اسرائیل میں متحدہ عرب امارات کے سفیر محمد محمود فتح علی عبداللہ الخجا نے کہا کہ یہ معاہدہ ایک بے مثال کامیابی ہے، دونوں ممالک کے تاجروں کو مارکیٹوں تک کم ٹیرف میں تیز تر رسائی ملے گی جس سے دوطرفہ تجارت میں اضافہ ہوگا۔واضح رہے کہ اسرائیل اورمتحدہ عرب امارات کےدرمیان باضابطہ تعلقات 2020 میں قائم ہوئے تھے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں